Wednesday | 21 November 2018 | 13 Rabiul-Awal 1440

Fatwa Answer

Question ID: 240 Category: Permissible and Impermissible
Watching Television or Videos through Other Sources

Assalamualaikum, is it permissible to watch cartoons (anime) or movies or things similar to these on TV or through other sources?

الجواب وباللہ التوفیق 

Purposely watching such cartoons which only have the pictures of living beings and no other prohibited aspects is considered Makrooh-e-Tehreemi (i.e. close to haram) whether they are the common humorous cartoons or some other type. جواہر الفقہ (۷/۲۶۴، ۲۶۵ مطبوعہ مکتبہ دارالعلوم کراچی)

Watching those films or cartoons in which there is music, songs, lewdness, nudity etc. is considered haram. Either ways, it is necessary to refrain from watching them. Please review detailed fatwa regarding this topic under Question No. 233.

https://www.shariahboard.org/fatwa/233

وہذا کلہ مصرح في مذہب المالکیة وموٴید بقواعد مذہبنا ونصہ عن المالکیة ما ذکرہ العلامة الدردیر في شرحہ علی مختصر الخلیل حیث قال: یحرم تصویر حیوان عاقل أوغیرہ إذا کان کامل الأعضاء إذا کان یدوم، ․․․ ویحرم النظر إلیہ إذ النظر إلی المحرّم حرام․ (از بلوغ القصد والمرام ص۱۹)

فقط واللہ اعلم بالصواب

Question ID: 240 Category: Permissible and Impermissible
ٹی وی یا دیگر ذرائع سے ویڈیو وغیرہ دیکھنا

السلام علیکم

میں یہ جاننا چاہتا ہوں کہ کیا کارٹون، فلمیں یا کوئی بھی ایسی چیز جس میں جاندار کی تصویر شامل ہو، دیکھنا جائز ہو گا؟

 

 

الجواب وباللہ التوفیق

کارٹون جس میں محض جاندار کی تصویر ہو اور دوسرے منکرات نہ ہو تو بالقصد اس کا دیکھنا مکروہ تحریمی ہے، درست نہیں ہے،خواہ وہ عام مزاحیہ کارٹون ہو یا کسی اور نوعیت کا،

جواہر الفقہ (۷/۲۶۴، ۲۶۵ مطبوعہ مکتبہ دارالعلوم کراچی)

اور جو فلمیں یا کارٹون جس میں میوزک گانا،فحاشی اوعر یانیت وغیرہ منکرات پائے جاتے ہوں ان کا دیکھنا حرام ہے۔بہر صورت اس سےبچنا ضروری ہے ۔اس تعلق سے تفصیلی فتویٰ سوال نمبر ۲۳۳ میں ملاحظہ فرمائیں۔

وہذا کلہ مصرح في مذہب المالکیة وموٴید بقواعد مذہبنا ونصہ عن المالکیة ما ذکرہ العلامة الدردیر في شرحہ علی مختصر الخلیل حیث قال: یحرم تصویر حیوان عاقل أوغیرہ إذا کان کامل الأعضاء إذا کان یدوم، ․․․ ویحرم النظر إلیہ إذ النظر إلی المحرّم حرام․ (از بلوغ القصد والمرام ص۱۹)

فقط واللہ اعلم بالصواب