Friday | 21 February 2020 | 27 Jamadiul-Thani 1441
Gold NisabSilver NisabMahr Fatimi
$4635$365.4$913.5

Fatwa Answer

Question ID: 508 Category: Social Dealings
Woman's Work Money

Assalamualaikum,

I have a question regarding wife working. My husband gave me the permission to work. Am I responsible for taking care of the financial requirments to run a household. If i chose to open my own account and not give my money to my husband do I have a right? Is my husband's money mine and my children's?

 

Jazakallah

الجواب وباللہ التوفیق

  • You have the right in your earnings whether you deposit it in your account or spend it on your husband and children.
  • Your and your children’s food expenses, clothing, and residence are incumbent on your husband.
  • It is better that شرعا (Shara’n) the husband takes care of the expenses and the woman pays attention to the house chores, Tarbiyat of children and their upbringing. There is راحت Raahat and عافیت A’afiyat in leading life this way between the husband & wife and the children.

واللہ اعلم بالصواب

Question ID: 508 Category: Social Dealings
بیوی کی ملازمت سے تنخواہ

میرے خاوند نے مجھے کام کرنے کی اجازت دی ہے کیا میں گھر  چلانے کے لیے اپنی کمائی خرچ کرنے کی ذمہ دار ہوں (۱) کیا میرا حق بنتا ہے کہ میں اپنی کمائی اپنے بینک اکاؤنٹ میں جمع کروالوں اور اپنے خاوند کو کوئی پیسے نہ دوں۔(۲) کیا میرے خاوند  کی کمائی میری اور میرے بچوں کی ہے ؟

الجواب وباللہ التوفیق

آپ کواپنی کمائی پر اختیار ہے،چاہے آپ اس کو اپنے اکاؤنٹ میں جمع کرلیں ،یا اپنے شوہر اور اولاد پر صرف کریں۔(۲)آپ کے خاوند کے اوپر آپ کا اور آپ کی اولاد کا نفقہ ،کسوہ اور سکنی لازم ہے۔(۳)بہتر یہ ہےکہ اخراجات کی ذمہ داری شرعاشوہر اٹھائے ،اور گھریلو امور ، بچوں کی تربیت او پرورش پر عورت دھیان دے۔اس نہج پر زندگی گزارنے میں زوجین اور اولاد دونوں کے لئے راحت اور عافیت ہے۔

واللہ اعلم بالصواب